گری راج سنگھ کے خلاف ہو کڑی کارروائی،

گری راج سنگھ کے خلاف ہو کڑی کارروائی،
آل انڈیا علما ومشائخ بورڈکی اقلیتی کمیشن میںشکایت
، نئی دہلی(پریس ریلیز) بیگو سرائے بہار سے بھارتیہ جنتا پارٹی کے لوک سبھا امیدوار گری راج سنگھ کی طرف سیپیغمبر اسلام حضرت محمدمصطفیٰ ﷺ اور ان کی بیٹی حضرت فاطمہ رضی اللہ عنہا پر نا زیبا تبصرہ کے بعد پورے ملک کے مسلمانوں میں کافی غصہ ہے۔ آل انڈیا علماء و مشائخ بورڈ نے قومی اقلیتی کمیشن سے گری راج سنگھ کی شکایت کی اور کمیشن سے ان کے خلاف سخت سے سخت کارروائی کرنے کی مانگ کی۔
بورڈ نے تحریری شکایت خط کے ذریعے کمیشن سے کہا کہ گری راج سنگھ کی اس نازیبا حرکت سے نہ صرف مسلمانوں کو بلکہ تمام مہذب معاشرے کو ٹھیس پہنچی ہے ۔یہحرکت ہندوستانی قانون کے مطابق غداری کے زمرے میں آتا ہے کیونکہ اس سے دو فرقوںکے درمیان تنائو پھیل سکتا تھا لہذاا ن کے خلاف سخت کاروائی کی جائے تاکہ ملک میں رہنے والے اقلیتی طبقے کو انصاف مل سکے.
بورڈ کے چیئرمین حضرت سید محمد اشرف کچھوچھوی نے لوگوں سے امن برقرار رکھتے ہوئے قانونی کارروائی کرنے کی اپیل کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں